Thursday, July 26, 2018

”سنی لیونی واحد بھارتی نہیں جنہوں نے فحش فلموں میں کام کیا بلکہ۔۔۔“ ایسی 10 بھارتی لڑکیاں منظرعام پر آ گئیں جنہوں نے بیرون ملک جا کر فحش فلموں میں اداکاری شروع کی، تفصیلات جان کر آپ کی حیرت کی انتہاءنہ رہے گی

سنی لیونی بھارتی نژاد کینیڈین شہری ہیں جنہوں نے فحش فلموں میں اداکاری کے ذریعے شہرت کمائی اور پھر واپس بھارت آ کر بالی ووڈ میں اپنے حسن کے جلوے بکھیرے۔ آج وہ بھارت کی معروف اداکاراﺅں میں شریک ہوتی ہیں اور دنیا بھر میں ان کے کروڑوں مداح موجود ہیں۔ یہ بھی پڑھیں۔۔۔”فخرزمان کا اب پاکستانی ٹیم کیلئے کوئی فائدہ باقی نہیں رہا کیونکہ۔۔۔“ عامر سہیل نے اوپننگ بیٹسمین کے بارے میں انتہائی تشویشناک بات کہہ دی لیکن آپ کو یہ جان کر حیرت ہو گی کہ سنی لیونی واحد بھارتی خاتون نہیں ہیں جنہوں نے فحش فلموں میں اداکاری بلکہ ان کے علاوہ بھی کئی لڑکیوں نے اس پیشے کو چنا اور شہرت حاصل کی۔ پریا انجلی ضرور پڑھیں:عمران خان ووٹ ڈال کر نکلے تو انہوں نے اپنی گاڑی میں کونسا معروف ترین گانا اونچی آواز میں لگا لیا؟ یہ کوئی پی ٹی آئی کا ترانہ نہیں تھا بلکہ۔۔۔ جواب آپ سوچ بھی نہیں سکتے ضرور پڑھیں:تمام سابق کرکٹرز عمران خان کو سپورٹ کر رہے ہیں لیکن یونس خان نے ایسی جماعت کو سپورٹ کرنے کا فیصلہ کر لیا کہ عمران خان بھی حیران رہ جائیں گے پریا انجلی نئی دہلی میں پیدا ہوئیں جنہیں 2 سال کی عمر میں امریکی جوڑے نے گود لے لیا اور منی سوٹا لے گئے جہاں ان کی پرورش ہوئی۔ انہوں نے ایری زونا یونیورسٹی سے مارکیٹنگ کی تعلیم حاصل کی جس کے بعد فحش فلموں میں اداکاری کا فیصلہ کیا اور 29 سال کی عمر میں 2007ءمیں پہلی فلم میں نظر آئیں۔ تاہم بعد ازاں انہوں نے اپنی انفرادی زندگی اور دیگر معاملات پر توجہ دینے کیلئے انڈسٹری کو خیرباد کہہ دیا۔ انجلی کارا انجلی کارا بھی بھارت میں پیدا ہوئیں اور 2003ءمیں فحش فلموں کی دنیا میں قدم رکھتے ہیں شہرت کی بلندیوں پر پہنچ گئیں۔ انہوں نے 2007ءتک فحش فلموں میں اداکاری کی اور پھر انڈسٹری کو چھوڑ دیا، آج کل وہ انگلینڈ میں مقیم ہیں۔ لی جے لی جے ویسے تو برطانوی کاﺅنٹی سرے کے علاقے کروئیڈن میں پیدا ہوئیں مگر ان کے والدین بھارتی ہیں۔ انہوں نے 21 سال کی عمر میں فحش فلموں کی دنیا میں قدم رکھا اور اب بھی کام جاری رکھے ہوئے ہیں۔ جیڈ جیول جیڈ جیول بھارتی شہر حیدرآباد میں پیدا ہوئیں اور آٹھ سال کے بعد انگلینڈ منتقل ہو گئیں اور پھر امریکہ چلی گئیں۔ کہتے ہیں کہ جب وہ نوجوان لڑکی تھیں تو بہت قدامت پسند تھیں مگر 1997ءمیں انہوں نے اپنی فحش ویب سائٹ بنا لی اور اس وقت ان کی عمر صرف 21 سال تھی۔ ڈیسٹینی ڈیویل ڈیسٹینی ڈیویل بھی بھارتی ہیں جبکہ ان کا اصل نام سبینا تھا لیکن انگلینڈ میں فحش فلموں کی انڈسٹری میں قسمت آزمائی شروع کرتے وقت انہوں نے نام بدل لیا۔ ڈیسٹینی ڈیویل نے صرف 19 سال کی عمر میں ہی فحش فلموں میں اداکاری شروع کر دی تھی۔ آریانا مسٹری آریانا مسٹری بھی بھارتی ہیں اور انہیں بھارتی فحش فلموں کی اداکارہ انجلی کارا نے فحش فلموں کی انڈسٹری میں متعارف کرایا۔ جیسمین چوہدری جیسمین چوہدری بھارت میں پیدا ہوئیں اور بھارت میں ہی فحش فلموں میں اداکاری شروع کر دی۔ وہ ملک میں بننے والی فلموں میں اداکاری کرتی ہیں۔ مادھوری پاٹیل جیسا کہ نام سے ہی ظاہر ہے کہ مادھوری پاٹیل بھی بھارتی ہیں اور فحش فلموں کی دنیا میں کافی شہرت رکھتی ہیں۔ شازیہ سہاری شازیہ سہاری بھی بھارتی ہیں جنہوں نے 2011ءمیں صرف 27 سال کی عمر میں فحش فلموں میں اداکاری شروع کر دی تھی۔ وہ اب تک کئی فلموں میں کام کر چکی ہیں۔ راکھی

کس کو کونسی وزرات دی جائے گی ؟ انتخابات میں واضح برتری حاصل کرتے ہی پی ٹی آئی کے کئی امیدوار سامنے آگئے

اسلام آباد(ویب ڈیسک)وفاق اور دو صوبوں میں کامیابی کے بعد تحریک انصاف میں وزرائے اعلیٰ اور وزارتوں کے امیدوار سامنے آگئے ہیں۔نجی ٹی وی نیوز کے مطابق غیر سرکاری غیر حتمی نتائج کے مطابق تحریک انصاف کے پاس وفاق کے علاوہ پنجاب اور خیبر پختونخوا میں حکومت بنانے کے لئے مطلوبہ اکثریت حاصل ہوگئی ہے ۔ جس کے بعد اب پارٹی میں وزرائے اعلیٰ اور اہم وزارتوں کے امیدوار بھی سامنے آگئے ہیں۔ذرائع کا کہنا ہے کہ شاہ محمود قریشی،علیم خان اور فواد چوہدری وزیر اعلی پنجاب کے امیدوار ہیں جب کہ گزشتہ دور حکومت میں خیبر پختونخوا کے صوبائی وزیر عاطف خان اب وزارت اعلیٰ کے امیدوار ہیں۔سابق وزیر اعلیٰ خیبر پختونخوا پرویز خٹک کی نظریں وفاقی وزارت داخلہ پر ہے، ڈاکٹر شیریں مزاری وزارت خارجہ اور نیشنل سیکیورٹی ڈویژن کی خواہشمند ہیں۔ جب کہ اسد عمر کو عمران خان پہلے ہی وزیر خزانہ نامزد کر چکے ہیں ۔واضح رہے اب ہے مرحلہ حکومت سازی کا، سب کے پتے شو ہوچکے ہیں کہ کس کے پاس کیا ہے۔ بظاہر مرکز۔ خیبرپختونخوا اور پنجاب میں تحریک انصاف حکومت بنانے کی پوزیشن میں نظر آرہی ہے۔ بلوچستان میں ” باپ ” کی حکومت بننے کے چانس ہیں کیونکہ ” مما ” وہاں سے ہار گئی ہے۔ ماں باپ کے جھگڑوں میں زیادہ نقصان اولاد کو اٹھانا پڑتا ہے۔ سندھ میں حسب روایت حسبِ معمول پیپلزپارٹی حکومت بنائے گی مگر شہری سندھ میں تحریک انصاف بڑی جماعت بن کر ابھری ہے جو کہ مضبوط اپوزیشن کا کردار ادا کرے گی۔یوں تو عمران خان سو دن کا ٹارگٹ دے چکے ہیں تو کم از کم سو دن تو انہیں دینا چاہیے کہ وہ کیا رزلٹ دیتے ہیں۔ کاغذی باتوں سے قطع نظر اگر تبدیلی کی خالق سرکار چند بنیادی معاملات پر توجہ دے تو یقیناً عوام کی دعائیں اسکا مقدر ہونگی

عمران خان اگر جیت بھی جاتے ہیں پھر بھی۔۔۔۔۔الیکشن کمیشن سے آنے والی خبر نے ٹائیگروں کے لیے خطرے کی گھنٹی بجا دی

اسلام آباد (ویب ڈیسک) سیکرٹری الیکشن کمیشن بابر یعقوب نے کہاہے کہ ووٹ دکھانے کا جرم ثابت ہوا توچیئرمین تحریک انصاف عمران خان کو سزا بھی ہو سکتی ہے۔تفصیلات کے مطابق اپنے ایک بیان میں بابر یعقوب کا کہناتھا کہ فرسٹ کلاس مجسٹریٹ کے اختیار کتنے استعمال ہوئے فی الحال اطلاع نہیں، پہلے بیلٹ پیپرز کے لیے سستا کاغذ استعمال ہوتا تھامگر اس بار مہنگا ہے جبکہ سب سے زیادہ اخراجات عملے کی تربیت پر ہوئے۔انہوں نے کہاکہ سراج رئیسانی شہید کو بتایا گیا تھا کہ اپنی موومنٹ سے پہلے آگاہ رکھیں، ان کے ساتھ ان کی اپنی سیکیورٹی بہت ہوتی تھی۔سراج رئیسانی بہت نڈر اور دلیر آدمی تھے،سانحہ مستونگ انتہائی افسوسناک تھا جبکہ 2013کے مقابلے میں بلوچستان کی صورت حال قدرے بہتر ہے۔واضح رہے کہ چیئرمین تحریک انصاف عمران خان جب ووٹ کاسٹ کرنے کیلئے پولنگ سٹیشن پہنچے تھے تو انہوں نے سب کے سامنے بیلٹ پیپر پر مہر لگائی تھی ۔دوسری جانب ایک اور خبر کے مطابق سینئر صحافی اور معروف تجزیہ کار حامد میر آج پولنگ کے دوران سامنے آنے والے دھاندلی پر چیخ اٹھے ۔نجی نیوز چینل جیو نیوز کی الیکشن ٹرانسمیشن کے دوران تجزیہ کار ارشد بھٹی نے کہا کہ کچھ لوگ دھاندلی سے متعلق دائمی بد گمانی کا شکار ہیں اور وہ ماضی کی طرح اس بار بھی دھاندلی کے الزام لگا رہے ہیں جس پر حامد میر بھڑک اٹھے اور کہا کہ صبح سے سن رہے ہیں کہ بلوچستان سے اچھی خبریں نہیں آرہیں ،بلیدہ سے خبر آئی کہ پولنگ اسٹیشن کے اندر سے بیلٹ باکس اٹھا کے بھاگ گئے ،تربت سے بھی ایسی ہی خبر آئی اور دیگر علاقوں سے بھی خبر یں آرہ ہیں ۔ان کا کہنا تھا کہ بلوچستان حساس صوبہ ہے ،احتیاط کی ضرورت تھی لیکن احتیاط کا مظاہرہ نہیں ہوا ۔حامد میر نے کہا کہ کل بلوچستان کی پارٹیاں ایک ہی بات کریں گی جسے بتانے کی ضرورت نہیں ہے سب جانتے ہیں ۔ان کا کہنا تھا کہ 2008اور 2013میں بھی ایسے ہی دھاندلی ہوئی ،یہ کوئی دائمی بد گمانی نہیں بلکہ نا اہلی کا مسئلہ ہے

عمران خان کی تقریر نے چاہنے والوں کو آبدیدہ کر دیا

پاکستان تحریک انصاف کے چئیرمین عمران خان نے آج الیکشن میں جیت کے بعد قوم سے خطاب کیا۔۔عمران خان کی تقریر کو پاکستانی میڈیا کے ساتھ انٹرنیشنل میڈیا پر بھی لائیو دکھایا گیا،،عمران خان کی تقریر پر ان کے چاہنے والوں نے جذباتی رد عمل دیا ہے۔۔عمران خان نے سیاست میں بہت زیادہ جدوجہد کی ہے۔اس لمبے عرصے میں عمران خان پر کئی قسم کے الزامات بھی لگائے گئے لیکن ان تمام تر الزمات کے باجود بھی عمران خان نے الیکشن 2018ء میں واضح اکثریت میں کامیابی حاصل کی ہے۔ جس کے بعد عمران خان نے قوم سے خطاب کیا۔۔عمران خان کی تقریر پر سوشل میڈیا صارفین نے بھی اپنے رد عمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ انہوں نے آج کے دن کے لیے بہت انتظار کیا۔ ایک سوشل میڈیا صارف کا کہنا تھا کہ مجھے پہلی بار لگ رہا کہ ایک وزیراعظم پاکستان انسان کی زبان بول رہا ہے۔کتنا اچھا اور مناسب الفاظ کا استعمال کیا گیا ہے۔ ایک سوشل میڈیا صار ف کا کہنا ہے کہ میں عمران خان کی تقریر سنتے ہوئے میں اپنے انسوؤں پر قابو نہیں رکھ سکا۔ ایک سوشل میڈیا صارف کا کہنا تھا کہ عمران خان پرچی کے ساتھ نہیں آئے بلکہ وہ ایک منتخب وزیراعظم ہوں گے جنھوں نے کئی پاکستانیوں کے دل جیتے ہیں۔ ایک صارف نے عمران خان کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ شکر ہے ہمیں ایسا وزیراعظم ملا ہے جو لکھی ہوئی تقریر نہیں کر رہا ہے۔ ایک صارف کا کہنا ہے کہ میں بہت زیادہ جذباتی وہ رہی ہوں۔ یہ سب ایک خواب کی طرح ہے۔۔عمران خان بطور وزیراعظم ؟ میں بہت زیادہ خوش ہوں۔ ایک صارف نے کہا کہ طویل عرصے بعد ایک لیڈر پرچی کے بغیر اپنی قوم سے خطاب کر رہا ہے۔ یاد رہے عمران خان نے آج الیکشن 2018ء میں جیت کے بعد عمران خان نے پہلی بار قوم سے خطاب کیا

جدہ: پاکستان میں انتخابات کے بعد سعودی ریال کی قیمت خرید میں معمولی کمی

آج کے روز پاکستان میں الیکشن نتائج سامنے آ جائیں گے ۔ الیکشن کے انعقاد کے بعد سے سعودی ریال کی قیمت میں معمولی کمی واقع ہوئی اور قیمت 33.90 رہی۔ اسی طرح ڈالر کی قیمت میں بھی معمولی کمی واقع ہوئی اور قیمت خرید 129.35ریکارڈ کی گئی ہے۔ ۔ اسی طرح قیمت فروخت 130.35رہی۔ واضح رہے کہ منگل کو قیمت خرید 129.50تھی۔ اسی طرح اماراتی درہم کی قیمت کم ہوکر 34.75رہی۔واضح رہے کہ پاکستان کی معیشت گزشہ چند مہینوں کے دوران دگرگوں صورتِ حال سے دو چار ہے۔ پاکستان کی اسٹاک ایکسچینج میں بھی مندی کا رحجان دیکھا جا رہا ہے۔ سیاسی عدم استحکام کے باعث پاکستان کی معیشت مسلسل زوال کی جانب گامزن رہی ہے۔روپیہ اپنی قدر کھوتا جا رہا ہے۔ گزشتہ ایک ہفتے کے دوران روپیے کی قدر میں بہت زیادہ مندی دیکھی گئی جس کے باعث غیر مْلکی کرنسیوں کی قدر میں ہوش رْبا اضافہ ہو گیا ہے۔ گزشتہ سوموار کے روز سعودی ریال کی قیمت خرید 34.20 پر جا پہنچی تھی جبکہ قیمت فروخت 34.40 تھی۔ امریکی ڈالر بھی مْلکی تاریخ کی بلند ترین سطح پر پہنچ چکا ہے۔ اوپن مارکیٹ میں امریکی ڈالر 131.50 روپے تک فروخت ہو تا رہا ہے جبکہ اس کی قیمتِ خرید 130.50کو چھو رہی تھی جس میں آج کے روز کمی آئی ہے۔ اماراتی درہم بھی 35 روپے کی بلند ترین قدر کو پہنچ کر اب کچھ نیچے آیا ہے۔ روپیے کی قیمت میں مسلسل کمی پر پاکستانی معیشت دان بہت پریشان ہیں۔ اْن کا کہنا ہے کہ آنے والی گورنمنٹ کو معیشت کے شعبے میں ان گِنت مسائل کا سامنا کرنا پڑے گا۔ گِرتی معیشت کو سنبھالا دینے کی غرض سے ہنگامی نوعیت کے کچھ غیر مقبول فیصلے بھی لینا پڑیں گے جس کے باعث عوامی حلقوں اور اپوزیشن کی جانب سے بھرپور احتجاج کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔ اس لحاظ سے اگلی حکومت کے لیے اقتدار عشرت کدے سے زیادہ کانٹوں کی سیج ثابت ہو گا۔ عالمی مالیاتی اداروں کی جانب سے قرضوں کی وصولی کو یقینی بنانے کے لیے پاکستانی حکام پر ٹیکسز میں مزید اضافے کا مطالبہ کیا جا رہا ہے۔ نگران حکومت نے معیشت کی خراب صورتِ حال سے نبرد آزما ہونے کی غرض سے ہی ایک ماہ کے اندر دو بار پٹرول کی قیمتوں میں اضافہ کیا۔ اگر چہ عدالتی مداخلت پر چند روپے کی کمی بھی کی گئی مگر پھر بھی اس اضافے پر عوام بلبلا اْٹھے ہیں۔ معاشی ماہرین کا خیال ہے کہ اگر موجودہ معاشی صورتِ حال میں بہتری واقع نہ ہوئی تو پھر روپیہ اپنی قدر مزید کھو بیٹھے گا جس کے باعث قرضوں کی غیر مْلکی کرنسی میں واپسی کے عمل میں شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے

Wednesday, July 25, 2018

”سنی لیونی واحد بھارتی نہیں جنہوں نے فحش فلموں میں کام کیا بلکہ۔۔۔“ ایسی 10 بھارتی لڑکیاں منظرعام پر آ گئیں جنہوں نے بیرون ملک جا کر فحش فلموں میں اداکاری شروع کی، تفصیلات جان کر آپ کی حیرت کی انتہاءنہ رہے گی

TAGS سنی لیونی بھارتی نژاد کینیڈین شہری ہیں جنہوں نے فحش فلموں میں اداکاری کے ذریعے شہرت کمائی اور پھر واپس بھارت آ کر بالی ووڈ میں اپنے حسن کے جلوے بکھیرے۔ آج وہ بھارت کی معروف اداکاراﺅں میں شریک ہوتی ہیں اور دنیا بھر میں ان کے کروڑوں مداح موجود ہیں۔ یہ بھی پڑھیں۔۔۔”فخرزمان کا اب پاکستانی ٹیم کیلئے کوئی فائدہ باقی نہیں رہا کیونکہ۔۔۔“ عامر سہیل نے اوپننگ بیٹسمین کے بارے میں انتہائی تشویشناک بات کہہ دی لیکن آپ کو یہ جان کر حیرت ہو گی کہ سنی لیونی واحد بھارتی خاتون نہیں ہیں جنہوں نے فحش فلموں میں اداکاری بلکہ ان کے علاوہ بھی کئی لڑکیوں نے اس پیشے کو چنا اور شہرت حاصل کی۔ پریا انجلی ضرور پڑھیں:عمران خان ووٹ ڈال کر نکلے تو انہوں نے اپنی گاڑی میں کونسا معروف ترین گانا اونچی آواز میں لگا لیا؟ یہ کوئی پی ٹی آئی کا ترانہ نہیں تھا بلکہ۔۔۔ جواب آپ سوچ بھی نہیں سکتے ضرور پڑھیں:تمام سابق کرکٹرز عمران خان کو سپورٹ کر رہے ہیں لیکن یونس خان نے ایسی جماعت کو سپورٹ کرنے کا فیصلہ کر لیا کہ عمران خان بھی حیران رہ جائیں گے پریا انجلی نئی دہلی میں پیدا ہوئیں جنہیں 2 سال کی عمر میں امریکی جوڑے نے گود لے لیا اور منی سوٹا لے گئے جہاں ان کی پرورش ہوئی۔ انہوں نے ایری زونا یونیورسٹی سے مارکیٹنگ کی تعلیم حاصل کی جس کے بعد فحش فلموں میں اداکاری کا فیصلہ کیا اور 29 سال کی عمر میں 2007ءمیں پہلی فلم میں نظر آئیں۔ تاہم بعد ازاں انہوں نے اپنی انفرادی زندگی اور دیگر معاملات پر توجہ دینے کیلئے انڈسٹری کو خیرباد کہہ دیا۔ انجلی کارا انجلی کارا بھی بھارت میں پیدا ہوئیں اور 2003ءمیں فحش فلموں کی دنیا میں قدم رکھتے ہیں شہرت کی بلندیوں پر پہنچ گئیں۔ انہوں نے 2007ءتک فحش فلموں میں اداکاری کی اور پھر انڈسٹری کو چھوڑ دیا، آج کل وہ انگلینڈ میں مقیم ہیں۔ لی جے لی جے ویسے تو برطانوی کاﺅنٹی سرے کے علاقے کروئیڈن میں پیدا ہوئیں مگر ان کے والدین بھارتی ہیں۔ انہوں نے 21 سال کی عمر میں فحش فلموں کی دنیا میں قدم رکھا اور اب بھی کام جاری رکھے ہوئے ہیں۔ جیڈ جیول جیڈ جیول بھارتی شہر حیدرآباد میں پیدا ہوئیں اور آٹھ سال کے بعد انگلینڈ منتقل ہو گئیں اور پھر امریکہ چلی گئیں۔ کہتے ہیں کہ جب وہ نوجوان لڑکی تھیں تو بہت قدامت پسند تھیں مگر 1997ءمیں انہوں نے اپنی فحش ویب سائٹ بنا لی اور اس وقت ان کی عمر صرف 21 سال تھی۔ ڈیسٹینی ڈیویل ڈیسٹینی ڈیویل بھی بھارتی ہیں جبکہ ان کا اصل نام سبینا تھا لیکن انگلینڈ میں فحش فلموں کی انڈسٹری میں قسمت آزمائی شروع کرتے وقت انہوں نے نام بدل لیا۔ ڈیسٹینی ڈیویل نے صرف 19 سال کی عمر میں ہی فحش فلموں میں اداکاری شروع کر دی تھی۔ آریانا مسٹری آریانا مسٹری بھی بھارتی ہیں اور انہیں بھارتی فحش فلموں کی اداکارہ انجلی کارا نے فحش فلموں کی انڈسٹری میں متعارف کرایا۔ جیسمین چوہدری جیسمین چوہدری بھارت میں پیدا ہوئیں اور بھارت میں ہی فحش فلموں میں اداکاری شروع کر دی۔ وہ ملک میں بننے والی فلموں میں اداکاری کرتی ہیں۔ مادھوری پاٹیل جیسا کہ نام سے ہی ظاہر ہے کہ مادھوری پاٹیل بھی بھارتی ہیں اور فحش فلموں کی دنیا میں کافی شہرت رکھتی ہیں۔ شازیہ سہاری شازیہ سہاری بھی بھارتی ہیں جنہوں نے 2011ءمیں صرف 27 سال کی عمر میں فحش فلموں میں اداکاری شروع کر دی تھی۔ وہ اب تک کئی فلموں میں کام کر چکی ہیں۔ راکھی راکھی بھی بھارتی ہیں لیکن اب امریکہ میں رہتی ہیں اور اپنی ذاتی فحش ویب سائٹ چلاتی ہیں

سب سے پہلے نتا ئج آگئے ، تحریک انصاف کی حیران کن کارکردگی

پی ایس 3 جیکب آباد میں تحریک انصاف کے عبدالرزاق 300 ووٹ لے کر آگے ہیں اور میر ممتاز حسین جن کا تعلق پیپلز پارٹی سے ہے انہوں نے 30 ووٹ لیے، اس طرح تحریک انصاف کے عبدالرزاق پولنگ سٹیشن قادر پور سے تین سو ووٹ لے کر آگے ہیں۔ پی ایس 2 جیکب آباد میں تحریک انصاف کے طاہر حسین کھوسو 180 اور پیپلز پارٹی کے سہراب خان سرکی نے 30 ووٹ حاصل کیے اس طرح یہاں بھی تحریک انصاف کے امیدوار آگے ہیں۔ دوسری جانب بونیر میں این اے 9 سے تحریک انصاف کے امیدوار برتری لیے ہوئے ہیں، تحریک انصاف کے شیر اکبر خان 79 ووٹ لے کر آگے، عوامی ورکر پارٹی کے فانونس گجر 76 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر ہیں